ایڈس بیماری نہیں خدا کا عذاب اور قہر ہے : ڈاکٹر عزیزی

aids-program-pic
شانتی پرساد جین کالج سہسرام میں بین الاقوامی ایڈس ڈے سے متعلق پی جی شعبہء علم سیاسیات میں دو بجے دن میں این ایس ایس افسر ڈاکٹر علاء الدین انصاری عزیزی کی صدارت میں شاندار سیمینار کا انعقاد ہوا جس میں خصوصی اسپیکر کی حیثیت سے ڈاکٹر اندر منی سنگھ شامل ہوئے ۔مذکورہ موقع میں پروفیسر پْشپا رانا رسِک ‘ پروفیسر ششیکلا کماری’ پروفیسر اِتِی بالا سنگھ ‘ پروفیسر گھوس کی موجودگی پروگرام میں اہمیت کا حامل رہا۔ڈاکٹر اندرمنی سنگھ نے اپنے خطاب میں کہا کہ احتیاط اور بچاو ہی ایڈس کا اہم علاج ہے ۔
صدرَِ سیمینار ڈاکٹر عزیزی نے کہا کہ ہم سب کا مشن اور مصمم اِرادہ ہے کہ روہتاس ضلع کو ایڈس مْکت بنانا ہے ۔دراصل یہ بیماری خدا کا عذاب ہے جسے اللہ نے عبرت کے لئے بنایا ہے ۔اللہ نے اپنے بندوں کو تمام حدودسے باخبر کردیا اور حلال و حرام کی تمیز تک بتادی لیکن افسوس کے انسانوں نے خدا کے خلاف بغاوت کا جھنڈا بلند کیا جس کی وجہ سے خدا نے اسی دنیا میں حرام کام کو انجام دینے والوں کے عبرت ناک بنادیا جو لا اعلاج ہے ۔انسانی دماغ اس بیماری کا اعلاج تلاش کرنے میں ناکام ہے ۔یہ ہے خدا کے قہر اور سائنس کی بے بسی ۔اس لئے انسانوں کو چاہئے کہ وہ سماج میں بہتر طریقے سے زندگی گزاریں تاکہ عذاب الہیٰ سے محفوظ رہ سکیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *