اے ایم یو کے اساتذہ و ریسرچ اسکالرس کی تین کتابوں کا اجراء

book-release
علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے آرٹس فیکلٹی لاؤنج میں منعقد ایک تقریب میں تین نئی کتابوں کا اجراء عمل میں آیا۔ یہ کتابیں ہیں :دانش راہ بین از محمد حارث بن منصور(براؤن بُکس، نئی دہلی) ، بِرجنگ دی ڈیوائڈ از فائزہ عباسی و سُجان مونڈل (وائیوا بُکس، نئی دہلی) اور مثنوی کرب جان کا تنقیدی مطالعہ از سیما صغیر(ایجوکیشنل بُک ہاؤس نئی دہلی) ۔ ابتدائی دو کتابیں یوجی سی ہیومن ریسورس ڈیولپمنٹ سنٹر، اے ایم یو کے ڈائرکٹر پروفیسر عبدالرحیم کو ان کی 60ویں سالگرہ پر نذر کی گئی ہیں۔ اس موقع پر استقبالیہ خطبہ پیش کرتے ہوئے براؤن بُکس پبلشرس کے ڈاکٹر سجاد اختر نے کہاکہ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے اساتذہ اور ریسرچ اسکالرس کی علمی خدمات کو قارئین کے سامنا لانا ہمیشہ باعث مسرت ہوتا ہے۔ مہمان خصوصی اور شعبۂ اردو دہلی یونیورسٹی کے استاد پروفیسر عبدالحق نے کہا کہ مشرقی ادب و ثقافت میں اپنی خدمات کے لئے علی گڑھ معروف ہے۔ یہاں ایک ہی جگہ نامور اسکالر اور محققین کی جماعت پائی جاتی ہے جو فخر کی بات ہے۔ انھوں نے زندگی، ادب اور علم کے میدان میں مشرقی تہذیب کا پاس رکھنے پر زور دیا۔
شعبۂ اردو، اے ایم یو کے پروفیسر صغیر افراہیم نے کتابوں کے مشمولات پر گفتگو کی۔ شعبۂ ترسیل عامہ کے پروفیسر شافع قدوائی نے کہاکہ علی گڑھ اپنے ماہرین تعلیم کو نذر عالمانہ تصنیفات کی ایک طویل تاریخ رکھتا ہے۔ شعبۂ انگریزی کے پروفیسر ایم عاصم صدیقی نے اساتذہ اور ریسرچ اسکالرس کی اس بات کے لئے ستائش کی کہ سائنسی علوم پر انگریزی اور اردو دونوں زبانوں میں لکھا جارہا ہے۔ لکھنؤ سے آئے مولانا نعیم الرحمٰن نے کہاکہ اے ایم یو کے طلبہ علامہ اقبال کی امیدوں کا محور ہیں۔شعبہ انگریزی کی سربراہ پروفیسر سیمیں حسن نے اپنے پیغام میں کہاکہ کتابوں کی مسلسل اشاعت سے کیمپس میں حرکت اور زندگی رہتی ہے۔ ابن سینا اکیڈمی کے ڈائریکٹر پروفیسر ظل الرحمٰن نے کہا کہ یہ کتابیں انگریزی اور اردو ادب میں ایک اہم اضافہ ہیں ۔ اس موقع پر مہمان اعزازی کے طور پر شعبۂ انگریزی کے سابق سربراہ پروفیسر مسعود الحسن، پروفیسر ہمایوں مراد، پروفیسر وضاحت حسین، پروفیسر ظفرالاسلام، ڈاکٹر راحت ابرار وغیرہ موجود تھے۔ مضامین تحریر کرنے والے ڈاکٹر امیراللہ خاں، ڈاکٹر شیریں شیروانی، ڈاکٹر فیض زیدی، شہ نور شان اور دیگر کو کتابوں کے نسخے پیش کئے گئے۔ پروگرام کی نظامت ڈاکٹر فائزہ عباسی نے کی۔ حافظ انس بلال نے قرآن مجید کی تلاوت کی اور شعبۂ انگریزی کے ریسرچ اسکالر سُجان مونڈل نے حاضرین کا شکریہ ادا کیا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *