فضائی آلودگی پرسپریم کورٹ کا ہریانہ وپنجاب سرکارکونوٹس

Supreme-Court
دہلی اوراس کے آس پاس کے علاقوں میں گذشتہ کئی دنوں سے دھندکاقہرجاری ہے۔ دہلی میں دھنداورآلودگی کے معاملے پرسپریم کورٹ نے ہریانہ اورپنجاب سرکارکونوٹس جاری کیاہے۔عدالت نے ہریانہ اورپنجاب میں پرالی یاپوال نہ جلانے کے حکم دےئے ہیں۔نوٹس میں سپریم کورٹ نے دونوں سرکاروں سے آلودگی کم کرنے کیلئے صلاح بھی مانگے ہیں۔پرالی جلانے کے معاملے کولیکرداخل کی گئی عرضی پرسپریم کورٹ نے آج 13نومبرکوسنوائی کے بعدنوٹس جاری کی ہے۔عرضی میں کہاگیاتھاکہ پرالی جلانے کے ساتھ ہی کئی اوربھی طرح کی لاپرواہی اورغلطیوں کی وجہ سے پلوشن کے ایسے حالات بن رہے ہیں۔یہ سنوائی چیف جسٹس دیپک مشرا،جسٹس اے ایم کھانلیوکراورجسٹس ڈی وائی چندرموڑکی بنچ نے کی۔
عرضی میں کہاتھاکہ سڑکوں پراڑرہی دھول،دہلی کے پڑوسی ریاستوں ہریانہ اورپنجاب میں پرالی جلائے جانے سے قومی راجدھانی دہلی اورآس پاس کے علاقوں میں آلودگی کی سطح بڑھ گیاہے۔بنچ نے کہاکہ ہم دھنداورفضائی آلودگی کونظراندازنہیں کرسکتے ہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *