کمل ہاسن نے سیاسی پارٹی بنانے کی تصدیق کی

kamal-hassan

معروف فلم اداکار کمل ہاسن نے ہندومہا سبھا کے ذریعہ جان سے مارنے کی دھمکی کے جواب میں کہا ہے کہ اب چونکہ جیلوں میں کوئی جگہ خالی نہیں ہے، اس لیے وہ ہمیں گولی مارکر ختم کرنا چاہتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ اگر تمام سچ بولنے والوں کو جیل میں ڈالو گے تو جیل چھوٹی پڑ جائیں گی۔ کمل ہاسن جان سے مارنے کے ہندو مہا سبھا کے بیان پر ردعمل کے ساتھ ہی چنئی میں ایک کارٹونسٹ کی گرفتاری پر صدائے احتجاج بلند کررہے تھے۔
کمل ہاسن نے ایک بار پھر اس بات کی تصدیق کی ہے کہ وہ بہت جلد اپنی سیاسی پارٹی کا اعلان کریں گے اور 7 نومبر کو اپنی 63 ویں سال گرہ پر ایک موبائل ایپلی کیشن جاری کریں گے۔
واضح ہو کہ کمل ہاسن نے ایک ہفت روزہ میگزین میں ہندو دہشت گردی سے متعلق مضمون لکھا تھا، جس کے ردعمل میں اکھل بھارتیہ ہندو مہاسبھا کے نائب صدر اشوک شرما نے کہا تھا کہ ان جیسے لوگوں کو گولی مار دی جانی چاہیے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *