مودی کوکلین چٹ،ذکیہ جعفری کی عرضی ہائی کورٹ میں مسترد

zakia-and-modi
گجرات ہائی کورٹ نے گلبرگ سوسائٹی دنگوں کے معاملے میں اس وقت کے وزیراعلیٰ نریندرمودی اوردیگرکونچلی عدالت کے ذریعہ کلین چٹ دےئے جانے کے خلاف کئے گئے فسادات کے دوران شہیداحسان جعفری کی اہلیہ ذکیہ جعفری کی عرضی کوردکردیاہے۔اس طرح گجرات ہائی کورٹ سے سال2002میں ہوئے فسادمعاملے میں وزیراعظم نریندرمودی کوکلین چٹ مل گئی ہے۔نچلی عدالت نے اس وقت کے وزیراعلیٰ نریندرمودی اوردیگرکوخصوصی جانچ ٹیم کے ذریعہ کلین چٹ دےئے جانے کوبرقراررکھاتھا۔اس فیصلے کے خلاف ذکیہ جعفری نے ہائی کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹایاتھالیکن یہاں بھی انہیں مایوسی ہی ہاتھ لگی۔کورٹ ان کی عرضی کوخارج کردیاہے۔ہائیکورٹ نے اس عرضی پرسنوائی 3جولائی کوہی پوری کرلی تھی۔اس میں نریندرمودی اور59دیگرپردنگوں کولیکرسازش رچنے کا ملزم بنائے جانے کی مانگ کی گئی تھی۔
ذکیہ جعفری کی عرضی کوخارج کرتے ہوئے ہائیکورٹ نے کہاہے کہ گجرات دنگوں کی دوبارہ جانچ نہیں ہوگی۔اس میں جعفری کے ذریعہ بڑی سازش کی بات سے کورٹ نے صاف انکارکردیا۔اوراسی کے ساتھ ساتھ ذکیہ جعفری سے ہائی کورٹ سے اوپرجانے کوکہا۔توقع کی جارہی ہے کہ وہ سپریم کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹائیں گی۔
واضح رہے کہ ریویوعرضی داخل کرنے والوں میں جعفری کے علاوہ سماجی کارکن تیستاسیتلواڈ کا این جی او’سیٹزن فارجسٹس اینڈ پیس‘بھی شامل ہے۔عرضی میں الزام لگایاگیاتھاکہ ان دنگوں کے پیچھے بڑی مجرمانہ سازش رچی گئی تھی۔عرضی دینے والوں نے اسے نئے سرے سے جانچ کی مانگ کی تھی۔عرضی میں مودی اور59دیگرلوگوں کولیکرمجرمانہ سازش رچنے کا مجرم بنائے جانے کی مانگ کی گئی ہے۔غورطلب ہے کہ 28فروری 2002کوگجرات کے گلبرگ سوسائٹی میں بھیڑنے احسان جعفری سمیت 68لوگوں کا قتل کردیاتھا۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *