پوجا اورعبادت ساتھ ساتھ

puja-and-ibadat
ملک میں ایک طرف ہندو انتہا پسندی انتہا پر ہے جبکہ دوسری طرف ایک ہندو خاتون نے باقاعدہ روزہ رکھ کر اور نمازکی پابندی کرکے نئی مثال قائم کردی ہے۔ شہر کانپور کی گیتا شرما ایک ہندو خاتون ہیں ، مگر پورے اہتمام اور عقیدت و احترام کے ساتھ رمضان المبارک کے روزے رکھتی ہیں اور نماز بھی پڑھتی ہیں۔ ان کے جذبہ کو لوگ ہندو مسلم اتحاد اور قومی یکجہتی کی مثال قرار دے رہے ہیں۔
کانپور شہر کے شیام نگر علاقہ میں رہنے والی گیتا شرما ، جو ایک ہندو خاندان میں پیدا ہوئیں اوراب ایک شادی شدہ زندگی گزار رہی ہیں ، ان کے شوہر پرمود شرما کے کئی مسلم خاندانوں سے بہتر تعلقات ہیں ، جن سے متاثر ہوکر گیتا شرما ماہ رمضان کے اب تک کے سارے روزے رکھے ہیں اور وہ وقت کی پابندی کے ساتھ نماز ادا کرتی ہیں ۔
ان کے شوہر کا کہنا ہے کہ عبادت کرنے میں کوئی گریز نہیں ہونا چاہئے خواہ وہ کسی بھی شکل میں ہو۔ آج معاشرے میں کچھ لوگ ایسے ہیں جو لوگوں کو باٹنے کا کام کرتے ہیں ، لیکن ہم سب ایک ہی مالک کے بندے ہیں۔ادھر گیتا شرما کا بھی کہنا ہے وہ روز بھگوان کی پوجا بھی کرتی ہیں اوراللہ کی عبادت بھی۔یقیان ایسی مثال نفرت کا زہر پھیلانے والے سیاستدانوں کے لیے ایک جواب ہے اور اس ملک کی مذہبی یکجہتی کی حقیقی تصویر پیش کرتی ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *