سنجے دت خواتین کو بااختیار بنانے میں یقین رکھتے ہیں

Sanjay-Duttہندی سنیماکے معروف مشہورادا کارسنیل دت کابیٹابالی ووڈاداکار سنجے دت جیل کی سزا کی وجہ سے پانچ برس کے وقفے کے بعد پہلی بار اپنی ایک فلم کے ساتھ واپسی کر رہے ہیں۔انھوں نے ہدایت کار امنگ کمار کی آنے والی فلم ’بھومی‘ میں بطور اداکار واپسی کی ہے۔فلم کے پروموشن کے سلسلے میں سنجے دت نے نامہ نگاروں سے بات چیت کرتے ہوئے خواتین کے ساتھ ہونے والی زیادتیوں پر تشویش کا اظہار کیا۔سنجے نے کہاکہ ریپ جیسے جرم کے لیے جلد سے جلد انصاف ہونا بہت ضروری ہے۔ ایسے کیسز کے خلاف ترجیحی بنیادوں پر کارروائی ہونی چاہیے۔
دارالحکومت دلی میں جنسی زیادتی کے واقعے ’نربھیا سانحہ ‘ پر سنجے دت نے کہاکہ اس سے بڑا اور برا کیس میں نے نہیں سنا تھا۔ میں 10 دن تک سویا نہیں تھا۔ میرے حساب سے نربھیا کو انصاف بھی نہیں ملا، چونکہ مجرم ایک نابالغ تھا تو پھر اس میں پوری طرح سے انصاف کہاں سے ہوا؟’
جیل سے رہائی کے بعد ان کی پہلی فلم بھومی ہے جس میں خواتین کے مسائل کو اجاگر کیا گیا ہے
سنجے دت کا کہنا تھا کہ وہ خواتین کو بااختیار بنانے میں یقین رکھتے ہیں۔ وہ کہتے ہیں کہ انڈین سماج میں ایک طرف تو درگا، کالی اور لکشمی جیسی دیویوں کی پوجا کی جاتی ہے اور دوسری طرف خواتین کے ساتھ زیادتیوں
کے واقعات میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔
سنجے دت ملک کی تمام بیٹیوں کو صلاح دیتے ہوئے کہتے ہیں کہ وہ اپنے والدین کی فرما برداری کریں اور وقت پر گھر واپس جایا کریں۔ انھوں نے کہا کہ گھر کے یہ اصول بیٹے اور بیٹی دونوں پر ہی نافذ ہونے چاہیں۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *