سمندری طوفان کے بعد ایک انوکھی مخلوق سطح زمین پر

سمندری طوفان ارما کا اثر اتنا زبردست تھا کہ اس سے بہت سے مکانات اور تجارتی مراکز تباہ و برباد ہو گئے، بجلی کا نظام درہم برہم ہو گیا اور بہت سے لوگ ہلاک ہوئے۔اس بات سے کوئی انکار نہیں کرسکتا ہے کہ سمندری طوفان جانی و مالی زبردست نقصان کا سب بنتا ہے اوراس کے ختم ہوجانے کے بعد بھی کئی طرح کی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ ابھی حال ہی میں ریاست بہار کے سیمانچل میں جو سیلاب آیا ،اس سے اس بات کا بخوبی اندازہ
لگایا جاسکتا ہے۔
مگر کہتے ہیں کہ ہر چیز میں جہاں منفی پہلو ہوتے ہیں وہیں کچھ مثبت پہلو بھی ہوتے ہیں۔ اگر اس پہلو کو دیکھنا ہو تو ارما طوفان کی تباہ کاری اور پھراس کے بعد کچھ نئی مخلوق کے سطح زمین پر ابھرنے سے دیکھا جاسکتا ہے۔ ابھی حال ہی میں امریکہ میں جو ارام طوفان آیا ہے اور اس کی وجہ سے جوتباہ کاری ہوئی ہے ،یقیناًیہ بہت ہی تکلیف دہ ہے مگر طوفان کے جانے کے بعد کچھ ایسی مخلوق کو دیکھنے کا موقع بھی ملا جو عام حالات میں کبھی نہیں دیکھے جاسکتے ہیں۔
امریکی ریاست ٹیکسس میں سمندر طوفان کے بعد اس کے ساحل پر لمبے دانتوں والی ایک عجیب و غریب سمندر مخلوق دیکھی گئی ہے۔ یہ’گارڈن ایل’ یا ‘کونگر ایل’ بھی ہوسکتا ہے کیونکہ یہ تینوں نسلیں ٹیکسس کے ساحل کے قریب پائی جاتی ہیں اور ان کے لمبے کیل نما دانت ہوتے ہیں۔یہ سمجھا جا رہا ہے کہ تیز ہواؤں اور سیلاب کا باعث بننے والا سمندر طوفان ہاروری اس کو یہاں تک پہنچانے کی وجہ ہو سکتا ہے۔اس لمبے دانتوں والی سانپ بام مچھلی کو ‘ٹسکی’ بام مچھلی بھی کہا جاتا ہے اور یہ عام طور پر مغربی بحر اوقیانوس میں 30 سے 90 میٹر گہرائی میں پائی جاتی ہے۔
Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *