بنگال بھی لنچنگ کی زدمیں

ایک طرف تو ملک بھر میں لنچنگ کے خلاف سول سوسائٹی بشمول معروف سماجی کارکن احجاجی مارچ کرکے امن کی فضا بنا رہے ہیں مگر دوسری طرف گائے کےنام پر لنچنگ اور علاقوں میں جاتی دکھائی پڑ رہی ہے۔ گزشتہ 26اگست کو مغربی بنگال کے جلپائی گوڑی میں بھی لچنگ میں ایک مشتعل ہجوم کے ذریعے 16سالہ انور حسین اور 19سالہ حفیظ الشیخ پیٹ پیٹ کر ہلاک کردئے گئے۔ یہ دونوں جانوروں کی ایک گاڑی میں سوار تھے۔ یہ واقعہ جلپائی گوڑی کے دھوپ پوری شہر سے 15کیلو میٹر دور برہورہا گائوں میں پیش آیا۔ عیاں رہے کہ انور حسین کوچ بہار ضلع کے سکنی والا گائوں اور حفیظ الشیخ آسام کے دھوبری کے باشندے تھے۔ انور حسین کے والد محمد حسین جو کہ یومیہ مزدوری کرتے ہیں کے مطابق اناور پنڈی واڑی مورسہ میں نویں کلاس کا طالب علم تھا جو کہ والدین کی مستقل آمدنی نہ ہونے کی صورت میں گاڑی کی صفائی اورخلاصی کاکام بھی کر تاتھا اوراس سے اپنی پڑھائی جاری رکھتا تھا۔ 26اگست کو اناور خلاصی کے طور پر مذکورہ گاڑی میں موجود تھا۔ یہ گاڑی قربانی کے لیے جانور خرید کر بکسی ہاٹ سے واپس لوٹ رہی تھی۔ قابل ذکر ہے کہ اس سے قبل بھی ڈھائی ماہ قبل شمالی دیناج پور ککے چوپڑا میں گئو رکشکوں نے مبینہ طورپر تین افراد کو مار مار کرہلاک کردیا تھا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *