شام میں کمیمائی حملہ، 100 افراد ہلاک، 400 سے زائد متاثر

Chemical-Attack-in-Syriaپیرس۔  شام کے شمال مغربی عدلب صوبے میں کلمشتبہ کیمیائی حملے میں کم از کم 100 افراد کی موت ہو گئی اور 400 سے زائد کو سانس لینے اور دیگر دقتیں ہیں۔ شام کے ایک طبی امدادی گروپ نے یہ اطلاع دی ہے۔ پیرس نشین بین الاقوامی تنظیم ’یونین آف میڈیکل کیئر آرگنائزیشن ‘ کے مطابق اس حملے میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں اضافہ ہو سکتا ہے۔ تنظیم نے بتایا کہ اس حملے میں جنوبی عدلب کے خان شیخوں کے آس پاس کے گاؤں بری طرح متاثر ہوئے ہیں اور عدلب شہر میں اس طرح کے حملوں کے 40 سے زیادہ واقعات ہوئے ہیں۔ اسے دیکھتے ہوئے ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ سے انکار نہیں کیا جا سکتا ہے۔

تاہم، شامی فوج کے ذرائع نے زہریلی گیس کے حملے کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ فوج نے کسی بھی کیمیائی ہتھیار سے حملہ نہیں کیا۔ فوج نے کہا کہ ہم نے نہ ہی  پہلے ایسا حملہ کیا ہے اور نہ ہی مستقبل میں اس طرح کا کوئی حملہ کریں گے۔ ‘آبزرویٹری نے میڈیکل ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ حملے سے پتہ چلتا ہے کہ یہ حملہ زہریلی گیس سے کیا گیا ہے۔ ایک شامی فوجی ذرائع نے کہا کہ گزشتہ ہفتے حکومت پر الزام عائد کیا گیا تھا کہ حکومت کیمیائی ہتھیاروں کا استعمال کر رہی ہے جو کہ ‘سچ سے دور’ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *