میں صدر جمہوریہ نہیں بن رہا ہوں، افواہوں پر دھیان نہ دیں: موہن بھاگوت

Mohan-Bhagwatناگپور: شیو سینا نے راشٹریہ سوئم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) کے سربراہ موہن بھاگوت کا نام صدر جمہوریہ کے عہدہ کے لئے آگے کیا تھا۔  بھاگوت نے آج واضھ کر دیا کہ وہ اس ریس میں بالکل نہیں ہے۔ انھوں نے ان خبروں کو صرف کوری افواہ قرار دیا۔ یہاں منعقد ایک پروگرام میں انھوں نے کہا کہ میڈیا میں جو چل رہا ہے وہ ہوگا نہیں، ہم سنگھ میں کام کرتے ہیں اور ہمیں وہاں نہیں جانا ہے۔ بتا دیں کہ موجودہ صدر جمہوریہ پرنب مکھرجی کی مدت کار اس سال جولائی میں ختم ہو رہی ہے۔

موہن بھاگوت نے مزید کہا کہ اگر تجویز آتی بھی ہے تو ہم اسے قبول نہیں کریں گے۔ آئندہ صدر جمہوریہ کے انتخاب کے لئے میرے نام والی نیوز صحیح نہیں ہے۔ میڈیا انٹرٹنمنٹ نیوز چلا رہا ہے۔ سنگھ پریوار کے ممبر کے طور پر ہم تنظیم اور سوسائٹی کے لئے کام کرتے رہیں گے۔ جب ہم نے سنگھ جوائن کیا تھا تو دوسری چیزوں کے لئے دروازے بند کر دئے تھے۔ ہم صرف سنگھ اور سوسائٹی کے لئے کام کرتے ہیں۔ بتا دیں کہ شیو سینا کے ایم پی سنجے رائوت نے کہا تھا کہ ہندوستان کو ہندو راشٹر بنانے کے لئے صدر جمہوریہ کے عہدہ پر بھاگوت اچھے ثابت ہوں گے۔

شیو سینا کے ممبر پارلیمنٹ رائوت نے کہا تھا کہ یہ ملک کا سب سے اعلیٰ عہدہ ہے۔ واضح ہے کہ صاف شبیہ والا شخص ہی اس پر بیٹھ سکتا ہے۔ ہم نے سنا ہے کہ صدر جمہوریہ کے لئے بھاگوت کے نام پر بحث ہوئی ہے۔ اگر بھارت کو ہندو راشٹر بنانا ہے تو بھاگوت صدر جمہوریہ کے لئے بہتر پسند ہوں گے، لیکن کس امیدوار کو پارٹی سپورٹ کرے گی یہ فیصلہ ادھو ٹھاکرے جی لیں گے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *