امریکہ میں حجاب پہن کر کام کر رہی ایئر لائن کی مسلم ملازم سے مارپیٹ

Burqanashiواشنگٹن: امریکہ میں حجاب پہن کر ایئر لائن میں کام کر رہی ایک مسلم خاتون ملازم پر نسلی حملہ کیا گیا۔ ایک شخص نے خاتون کو لات ماری اور اس سے بدزبانی بھی کی۔ حملہ آور نے کہا کہ اب یہاں ٹرمپ ہے اور وہ تم سب سے چھٹکارا پائے گا ۔ کوینس ڈسٹرکٹ اٹارنی ریچرڈ اے برائون نے اپنے بیان میں کہا کہ رابعہ خان ڈیلٹا ایئر لائن میں کام کر رہی ہیں۔
معلومات کے مطابق خاتون ملازم جان ایف کینیڈی انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر اپنے دفتر میں بیٹھی تھیں۔تبھی رابن روڈس نامی شخص اروبا سے آکر یہاں میساچوسیٹس کے لئے اپنی کنکٹنگ فلائٹ کا انتظار کر رہا تھا۔ اسی درمیان وہ رابعہ کے پانس پہنچا اور دروازے پر زور سے مکا مارا۔ اس کے بعد رابعہ کے داہنے پیر پر لات ماری۔ اس کے بعد باہر نکلنے کا راستہ بند کرنے پر رابعہ بھاگ کر لائونج کی فرنٹ ڈیسک تک پہنچیں ۔ روڈس ان کے پاس گیا اور گھٹنوں پر بیٹھ کر نماز کی نقل کرنے لگا۔ اس نے کہا اسلام، آئی ایس آئی ایس، اب یہاں ڈونالڈ ٹرمپ ہے۔ وہ تم سب سے چھٹکارا پا لے گا۔روڈس پر حملے، اور نسلی حملے کے تحت استحصال سمیت کئی الزامات میں معاملے درج کئے گئے ہیں۔ قصور وار پائے جانے پر اسے چار سال تک کی جیل ہو سکتی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *