ملک بھر میں جے للیتا کی صحت کے لیے دعائیں

damiتمل ناڈو کے چنیئی کے آپولو ہسپتال کے باہر ہزاروں افراد جمع ہیں اور وزیراعلیٰ جے للیتا کی جلد صحت یابی کے لیے دعاگو ’اے آئي اے ڈی ایم کے پارٹی نے جے للیتا کو فی الحال خطرے سے باہر بتایا ہے اور کہا ہے کہ ان کی اینجيوپلاسٹی کی گئی ہے۔‘
جے للیتا کی صحت پر مکمل نگرانی کے لیے دلی کے معروف طبی ادارے ایمس (اے آئی آئی ایم ایس) کے چار ڈاکٹروں کی ایک ٹیم بھی پیر کو چینئی کے لیے روانہ ہوئی ہے۔
وزیر اعلیٰ جے للیتا کو اتوار کی شام دل کا دورہ پڑا تھا اور اُن کی حالت انتہائی تشویشناک بتائی جا رہی تھی۔دل کا دورہ پڑنے کے بعد جے للیتا کو آپولو ہسپتال کے انتہائی نگہ داشت والے شعبے (آئی سی یو) میں منتقل کر دیا گيا۔
ہسپتال کے باہر جمع ان کے مداحوں کو کنٹرول کرنے کے لیے سکیورٹی کا سخت انتظام کر رکھا ہے۔خیال رہے کہ جے للیتا تمل ناڈو میں بے حد مقبول رہنما ہیں اور ان کے حامی انھیں اماں کہتے ہیں۔ وہ 22 ستمبر سے ہی آپولو ہسپتال میں زیرِ علاج ہیں اور چند ہی روز قبل انھوں نے بطورِ وزیر اعلیٰ اپنی ذمہ داریاں نائب وزیر اعلیٰ کو سونپی تھیں۔
گذشتہ شب آپولو ہسپتال کے باہر ان کی پارٹی کے کارکنوں اور ان کے مداحوں کی بھیڑ یکجا رہی۔انتظامیہ نے لوگوں سے افواہوں سے بچنے کے لیے کہا ہے اور واضح کیا ہے کہ سوموار کو سکول، کالج اور دفاتر کھلے رہیں گے اور امتحانات معمول کے مطابق ہوں گے۔
صدر پرنب مکھرجی نے بھی جے للیتا کے دل کا دورہ پڑنے کی خبر سن کر دکھ کا اظہار کیا ہے اور ان کی فوری صحت یابی کی دعا کی ہے جبکہ کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی سمیت ملک کے سرکردہ رہنماؤں نے بھی ان کی جلد صحت یابی کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا ہے۔
آپولو ہسپتال کی شریک مینیجنگ ڈائریکٹر سنگیتا ریڈی کا کہنا ہے کہ ’ہمارے ڈاکٹر وزیر اعلیٰ کی طبیعت کا خاص خیال رکھ رہے ہیں۔ وہ ان کی صحت کی دیکھ بھال کی ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں۔‘

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *