بڑے کا گوشت موت تک لے جاسکتاہے

metسردی کے موسم میں قدرتی طور پر روغنی کھانے کے لئے دل مائل ہوتا ہے ،خاص طور پر سرخ گوشت کا استعمال کرنے والے لوگ اس موسم میں مختلف طریقوں سے اس گوشت کا استعمال کرتے ہیں ۔ایسے لوگوں کے لئے امریکہ کی ایک تحقیق میں خبر دار کیا گیا ہے کہ وہ اس گوشت کا استعمال کرنے سے پرہیز کریں۔کیونکہ اس میں موجود چکنائیاں نہ صرف صحت کے لیے مضر ہیں بلکہ امراضِ قلب اور کینسر کی وجہ بن کر وقت سے پہلے موت تک بھی لے جاسکتی ہیں۔اس بات کا انکشاف امریکا میں کیے گئے ایک بڑے اور قابلِ عمل مطالعے میں کیا گیا ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ بڑے کے گوشت میں چکنائیاں زائد مقدار میں ہوتی ہے۔ اس سروے میں ایک لاکھ سے زائد مرد و خواتین کو شامل کیا گیا اور ان کا 32 سال تک مطالعہ کیا گیا۔ ہر 2 یا 4 سال بعد لوگوں سے چکنائی کھانے کے متعلق پوچھا گیا اور شرکا کو چکنائی کھانے کی بنیاد پر 5 گروہوں میں تقسیم کیا گیا اور یعنی انہیں کم سے کم اور زیادہ سے زیادہ چکنائیاں کھانے والے گروپوں میں رکھا گیا۔ تحقیق کے مطابق 32 سال کے عرصے میں 33 ہزار سے زائد افراد لقمہ اجل بنے۔البتہ رپورٹ میں یہ بتایا گیا ہے کہ اگر سرخ گوشت کو استعمال کرنے والے اس کی چکنائی کو کم کرکے استعمال کریں تو 27 فیصد تک اس کے مضرات کو کم کی اجاسکتا ہے۔ سروے سے معلوم ہوا ہے کہ جن لوگوں کی خوراک میں سرخ گوشت اور کیک پیسٹری شامل تھے ان میں سیر شدہ چکنائیوں کی مقدار زیادہ تھی اور وہ جلد ہی امراض کے شکار ہوکر موت کے منہ میں چلے گئے۔ ماہرین کا مشورہ ہے کہ سرخ گوشت اور کیک وغیرہ سے دور رہ کر کینسراور امراضِ قلب کی شرح کو کم کیا جاسکتا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *