کمپیوٹروائرس کیا ہے؟

شیام سندر
p-10bآج کے اس تکنیکی دور میں کمپیوٹر ، لیپ ٹاپ، موبائل اور ٹیب کا استعمال عام بات ہے۔ لیکن ان کا استعمال کرنے والے سبھی لوگوں کووائرس کا ڈر اور اس سے متعلق بھرم کا خوف رہتا ہے۔ کمپیوٹر وائرس کی فل فارم وائٹل انفارمیشن ریسورسز انڈر سیزے ہوتی ہے۔ وائرس بھی کمپیوٹر پروگرام یا کہیں سافٹ ویئر ہوتا ہے۔ یہاں ہم یہ جانیں گے کہ آخر سافٹ ویئر ہوتا کیا ہے؟ سافٹ ویئر ایک یا ایک سے زیادہ کمپیوٹر پروگرام کا مجموعہ ہوتا ہے،جسے کمپیوٹر پروگرامنگ کے ذریعہ کسی خاص کام کو کرنے کے لےے تیار کیا جاتا ہے۔ اب سوال یہ اٹھتا ہے کہ پروگرام کیا ہوتا ہے؟ پروگرام ایک یا ایک سے زیادہ ہدایات کا مجموعہ ہوتا ہے، اب بات آتی ہے کہ ہدایت کیا ہوتی ہے۔ ہدایت کمپیوٹر کے سمجھنے لائق زبان میں (پروگرامنگ لینگویج) کمپیوٹر کا کام کرنے کے لےے دی گئی اطلاع ہوتی ہے۔
کمپیوٹر وائرس ایک پروگرام ہے، جسے خاص طور سے دوسرے پروگرام کے کام میںرکاوٹ ڈالنے کے مقصد سے تیار کیا جاتا ہے۔ یہ یوزر کے اجازت کے بغیر اس کے کمپیوٹر کوانفیکٹیڈ کرسکتا ہے۔ سب سے خاص بات یہ ہے کہ یوزر کو اس کا پتہ بھی نہیں چلتا ہے۔ مختلف قسم کے مالویئر (malware) اور ایڈویئر (adware) پروگرام کے حوالے سے بھی وائرس لفظ کا استعمال عام طور پر ہوتا ہے۔ حالانکہ ایسا کبھی کبھی بھول سے بھی ہوتا ہے۔اصل وائرس اہم پروگرام کے کوڈ (پروگرامنگ) میںتبدیلی کرسکتا ہے یا کوڈ خود اپنے آپ کو نہ ختم ہونے والے لوپ میںتبدیل کرسکتا ہے۔ جیساکہ ایک بدل سکنے والے وائرس میںہوتا ہے۔ وائرس نام اتفاق سے لوگوں کو بیمار کرنے والے وائرس سے ملتا ہے۔ لوگوں کو لگتا ہے کہ کمپیوٹر وائرس بھی کمپیوٹر میںآکر اسے بیمار کردیتے ہیں یا کہیںاس کے عام طریقہ کار میںرکاوٹ پیدا کرتے ہیں۔ یہ بات کچھ حد تک تو ٹھیک ہے، لیکن وائرس کا اہم مقصد صرف کمپیوٹر میموری میں جمع اعداد وشمار اور رابطہ میںآنے والے سبھی پروگراموں کو اپنے انفیکشن سے متاثر کرناہوتا ہے۔کمپیوٹر وائرس کچھ ہدایتوںکامحض ایک کمپیوٹر پروگرام ہوتا ہے۔ یہ وائرس پروگرام کسی بھی عام کمپیوٹر پروگرام کے ساتھ جڑ جاتے ہیں اور ا ن کے ذریعہ کمپیوٹروں میںداخل ہوکر اپنے مقصد یعنی ڈاٹا اور پروگرام کو ختم کرنے یا اسے انفیکٹیڈ کرنے کے مقصد کو پورا کرتے ہیں۔ یہ اپنے رابطہ میں آنے والے سبھی پروگراموں کی پروگرامنگ کو متاثر کردیتے ہیں یا اس میں تبدیلی کردیتے ہیں۔ وائرس سے متاثر کوئی بھی کمپیوٹر پرگرام اپنے عام انداز میںکام نہیںکرپاتا ہے۔ اس کے کام کرنے میں طرح طرح کی رکاوٹیں آتی ہیں۔ یہ رکاوٹیں وائرس کی قسم اور اس کے طریقہ کار پر انحصار کرتی ہےں۔ ہر وائرس پروگرام کچھ کمپیوٹر کی ہدایات کا ایک گروپ ہوتا ہے، جس میں اس کے وجود کو بنائے رکھنے کا طریقہ ، انفیکشن پھیلانے کا طریقہ اور نقصان کی قسم ڈفائن ہوتی ہے۔ سبھی کمپیوٹر وائرس پروگرام خاص طور سے اسمبلی زبان یا کسی اعلیٰ سطحی زبان میں تیار کےے جاتے ہیں ۔
کمپیوٹر وائرس کچھ ہدایتوں کا محض ایک کمپیوٹر پروگرام ہوتا ہے، جو انتہائی باریک، لیکن طاقتور ہوتا ہے۔ یہ کمپیوٹر کو اپنے طریقے سے ہدایت کرسکتا ہے۔ یہ وائرس پروگرام کسی بھی عام کمپیوٹر پروگرام کے ساتھ جڑ جاتے ہیں اور ان کے ذریعہ کمپیوٹروں میںداخل ہوکر اپنے مقصد یعنی ڈاٹا اور پروگرام کو ختم کرنے یا اسے انفیکٹیڈ کرنے کے مقصد کو پورا کرتے ہیں۔ یہ اپنے رابطے میں آنے والے سبھی پروگراموں کی پروگرامنگ کو متاثر کردیتے ہیں یا اس میںتبدیلی کردیتے ہیں۔
جس طرح بیماری کا وائرس ایک شخص سے دوسرے شخص کے رابطے میںآنے سے پھیلتاہے، ٹھیک اسی طرح ایک کمپیوٹر کسی بھی ذریعہ دوسرے کمپیوٹر کے رابطے میںآنے سے وائرس پھیلتا ہے۔ ذریعے کئی ہوسکتے ہیں، جیسے کہ انٹر نیٹ، پورٹیبل ڈیوائس (فلاپی ڈسک، سی ڈی، ڈی وی ڈی، پین ڈرائیو اور موبائل میں استعمال ہونے والے ڈیٹا کارڈ)۔ انہی کے ذریعہ وائرس ایک کمپیوٹر سے دوسرے کمپیوٹر میں پھیلتا ہے۔ کبھی کبھی کمپیوٹر وارWorm) (اور ٹروجن ہارس (trojan horse) کے لےے بھی بھرم کے ساتھ وائرس لفظ کا استعمال کیا جاتا ہے۔ ایک وارم ایک سے دوسرے کمپیوٹر میںخود بخود پھیل سکتاہے۔ اسے منتقل کرنے کے لےے میڈیم کی ضرورت نہیںہوتی ہے۔ ٹروجن ہارس ایک ایسا پروگرام ہے جوعموماً نقصاندہ نہیںہوتا ہے، لیکن یہ کمپیوٹر سسٹم کے اعدادوشمار ، اس کے طریقہ کار یا کام کو مکمل کرنے کے دوران نیٹ ورکنگ کو نقصان پہنچا سکتا ہے۔ عموماً ایک وارم کمپیوٹر ہارڈویئر سافٹ ویئر کو نقصان نہیںپہنچاتا ہے، جبکہ اصولی طورپر ایک ٹروجن ، کام کے دوران کسی طرح کا نقصان پہنچانے کا اہل نہیںہوتا ہے، لیکن جیسے ہی انفیکٹیڈ کوڈ چلتا ہے،ٹروجن ہارس کمپیوٹر میں داخل ہوجاتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ لوگوں کے لےے وائرس اور دیگر مالویئر تلاش کرنا بہت ہی مشکل ہوتا ہے، اسی لےے انھیںاس کے لےے اسپائی ویئر پروگرام اور رجسٹریشن کے عمل کا استعمال کرنا پڑتا ہے۔ وائرس خود کو نہ تلاش کرپانے کے لےے اور کمپیوٹر پروگراموں کو برباد کرنے کے لےے ہی بنائے جاتے ہیں۔ یہ کام خاص طور سے کمپیوٹر پروگرامنگ میںایکسپرٹ لوگ ہی کرتے ہیں۔ماہرین کا کہنا ہے کہ کچھ وائرس کو وائرس فائلوں کو ہٹانے یا ہارڈ ڈسک reformatting کا ہی انتظار رہتا ہے۔ کیونکہ انھیں اسی کام کے لےے بنایا جاتا ہے۔ کچھ مالویئر ڈسٹرکٹو ن پروگراموں، ڈیٹا ڈکشنری کو ڈیلیٹ کرنے یا ہارڈ ڈسک کو دوبارہ فارمیٹ کرنے کے دوران کمپیوٹر کو نقصان پہنچانے کے لےے پروگرام کےے جاتے ہیں۔ عام طور پر مالویئر پروگرام کمپیوٹر یوزر کے لےے مسائل پیدا کرسکتے ہیں۔ وہ عام طور پر ویلڈ پروگراموں کے ذریعہ استعمال کی جانے والی کمپیوٹر میموری کو اپنے کنٹرول میںلے لیتے ہیں۔ اس کے نتیجے میںکمپیوٹر اچانک بے ترتیبی کارویہ کرنے لگتا ہے جیسے کہ ماو¿س کا کرسر اپنے آپ موو کرنے لگے یا کمپیوٹر اچانک ہینگ ہوجائے۔ اس کے علاوہ بہت سے مالویئر بگ (bug) کی زد میںہوتے ہیں اور یہ بگ سسٹم کو نقصان پہنچا سکتے ہیں یا ڈاٹا لاس (data loss) کا سبب ہوسکتے ہیں۔ کئی پروگرام ایسے ہوتے ہیں، جو یوزر کے سامنے اپنے آپ نازل ہوجاتے ہیں اور اچانک ڈاو¿ن لوڈ ہوجاتے ہیں۔ اس طرح کے پروگراموں کی وجہ سے کمپیوٹر کی اسپیڈ بہت کم ہوجاتی ہے، لیکن انھیں ڈھونڈنا اور اس کا حل نکالنا بہت مشکل ہوتا ہے۔ یہ وائرس کمپیوٹر یوزر کے لےے لگاتار مسائل پیدا کرتے ہیں۔ سسٹم پر زیادہ دباو¿ پڑنے سے یہ کریش ہوسکتا ہے۔ اس کے علاوہ سیو کی گئی فائلیں وائرس بگ کی زد میںآسکتی ہیں۔ اس وجہ سے ڈیٹا کا نقصان ہوسکتا ہے۔
وائرس کی قسمیں
فائل فیکٹر وائرس: یہ وائرس کمپیوٹر میں فائل کے ایڈریس کو بدل دیتے ہیں۔
ٹروجن ہارس: ایک ٹروجن بڑی خفیہ طریقے سے آپ کے کمپیوٹر میں فائل کے ایڈریس کو انفیکٹیڈ کردے گا، جو جان بوجھ کر آپ کو پریشان کرنے کے لےے بنایا گیا پروگرام ہے ۔ ٹروجن دیگر سلسلے میں سب سے اوپر کے زمرے میںآتا ہے۔ یوزر کی جانکاری کے بغیر ایک سسٹم میںسیو ہوجاتا ہے۔ ٹروجن کو آپ کے سسٹم میںہیکنگ یا کہیںآپ کے سسٹم کی جانکاری چرانے کے لےے استعمال کیا جاسکتا ہے۔ یہ سائبر وار کا ایک اہم ہتھیار ہوتا ہے، جس کا دنیا بھر کے ہیکر استعمال کرتے ہیں۔ ٹروجن بھی کئی قسم کے ہوتے ہیں، ان میںسے کچھ مندرجہ ذیل ہیں۔
-1 ریموٹ ایڈمنسٹریشن ٹروجن
-2 ڈاٹااسٹیلنگ ٹروجن
-3 سیکورٹی ڈسیبل ٹروجن
-4 کنٹرول چینجر ٹروجن
کچھ مشہور ٹروجن:
Beast (بیسٹ)
Back orfice (بیک اوریفائس)
Pro Rat (پروریٹ)
Girl Friend (گرل فرینڈ)
بوٹ سیکٹر وائرس: یہ ایک ایسا وائرس ہے، جو کہ بوٹنگ کے وقت کمپیوٹر کے ذریعہ پڑھا جاتا ہے کہ سسٹم بوٹ فائلوں کو ہی دیکھتا ہے۔ یہ عام طور پر فلاپی ڈسک کے ذریعہ ہی پھیلتا ہے۔ یہ ایسا وائرس ہے، جو کہ سسٹم BIOS پر اثر ڈالتا ہے، جس کی وجہ سے کمپیوٹر کے ہارڈ ویئر کام کرنا چھوڑنے لگتے ہیں۔
Macro Virus (میکرو وائرس): میکرو وائرس سیلف ایگزیکیوٹ کرنے کے لےے تیار کےے جاتے ہیں۔ یہ میکرو پروگرا منگ زبان کا استعمال کرنے والے وائرس ہوتے ہیں۔ وہ ایسے ایم ایس ورڈ یا ایم ایس ایکسیل کی شکل میںدستاویزوں کو انفیکٹیڈ کردیتے ہیں اور عام طور پر اسی طرح کی دیگر دستاویزوں میںاصل ٹیکسٹ کو اپنی لینگویج میں تبدیل کردیتے ہیں۔
Worms (وارمس): اس طرح کی پروگرامنگ وارم پیدا کردیتی ہے او رخو د کی کاپیوں کا ڈسٹریبوشن کردیتی ہے۔مثال کے طور پر ایک سی ڈی سے دوسری سی ڈی ، ایک ای۔میل سے دوسرے ای۔ میل کا استعمال کرکے اپنے آپ کو پھیلاتا ہے۔ یہ ایک انفیکٹیڈ ای۔میل پر کلک کرنے پر کمپیوٹر میںآجاتا ہے۔
Mmemory Resident Virus(میموری ریزیڈنٹ وائرس): میموری ریزیڈنٹ وائرس کمپیوٹر کی پرائمری میموری جسے ریڈ اونلی میموری (ریم) کہتے ہیں، میںرہتے ہیں۔ جب ایک پروگرام کمپیوٹر پر چلتا ہے، تو یہ بھی اسی کے ساتھ چلتے ہیں اور شروعات میںہی پروگرام کو بند کردیتا ہے۔
Rootkit Virus (روٹ کٹ وائرس): روٹ کٹ وائرس کسی کمپیوٹر سسٹم کا کنٹرول حاصل کرنے کے لےے بنایا جاتا ہے، جو کہ ایک نہ تلاش کیا جانے والا وائرس ہے۔ روٹ کٹ وائرس لائنیکس پر مبنی آپریٹنگ سسٹم سے آتا ہے۔ یہ وائرس عام طور پر ٹروجن کے ذریعہ بھی قائم ہوتا ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *