ایم پی فنڈ کے پیسوں کا کیا ہوا

ترقیات کے کاموں کے لئے آپ کے علاقے کے ممبر پارلیمنٹ کو ہر سال کروڑوں روپے ملتے ہیں، جسے ’’ایم پی مقامی ترقیاتی فنڈ‘‘کہا جاتا ہے۔ اس فنڈ سے آپ کے علاقے میں مختلف ترقیاتی کام کیے جانے کا انتظام ہوتا ہے۔کیا کبھی آپ نے اپنے علاقے میں ایم پی فنڈ سے ہوئے ترقیاتی کام کے بارے میں جاننے کی کوشش کی؟کیا آپ نے کبھی یہ سوال پوچھا کہ آپ کے علاقے میں ایم پی فنڈ سے کتنا کام ہوا ہے؟آپ اس وقت کو یاد کیجئے، جب کوئی لیڈر آپ سے ووٹ مانگنے آتا ہے اور کہتا ہے کہ آپ اسے ووٹ دیں، تاکہ وہ اگلے پانچ سالوں تک آپ کی خدمت کرتا رہے یعنی اس حساب سے دیکھیں تو عوام مالک اور لیڈر خدمتگار ہے، لیکن انتخاب جیتنے کے بعد کیا ہوتا ہے؟ کیا آپ کو پتہ چلتا ہے کہ آپ کے ایم پی کو علاقے کی ترقی کرنے کے لئے سرکار کی طرف سے جو کروڑوں روپے ملتے ہیں، وہ کہاں جاتے ہیں۔؟ آپ کے علاقے کی ترقی میں ایم پی فنڈ کا کتنا استعمال ہوا؟کہیں ایم کے چہیتوں کے بیچ اس فنڈ کا بندربانٹ تو نہیں ہوگیا یا پھر ٹھیکدار اور لیڈر مل کر اس فنڈ کو ہضم تو نہیں کر گئے؟ایسے تمام سوال آپ کے من میں ضرور آتے ہوں گے، لیکن آپ یہ سوال اپنے ایم پی سے نہیں پوچھتے۔ وجہ چاہے جو بھی ہو، لیکن سوال نہ پوچھ کر آپ ایک طرح سے بد عنوانی کو ہی بڑھاوا دیتے ہیں۔ ایسے میں یہ ضرور ہے کہ آپ سوال پوچھیں، تاکہ نظام اور آپ کے ایم پی پر دبائو بن سکے۔ اس کا سب سے بڑا فائدہ یہ ہوگا کہ بنا کوئی کام کیے یا آددھا ادھورا کام کرکے اب تک جو پیسہ بد عنوان لوگوں کی جیب میں چلا جاتا تھا، وہ آپ کے علاقے کی ترقی میں کام آے گا۔ ایسا نہیں ہے کہ ایک درخواست دینے سے ہی تبدیلی نظر آنے لگے گی لیکن صرف آپ کی اکیلی درخواست بھی ان بد عنوان لوگوں تک یہ پیغام پہنچانے کے لئے کافی ہوگی کہ عوام اپنے خدمتگاروں پر لگام لگانا جانتے ہیں۔ اگر آپ سچ مچ تبدیلی چاہتے ہیں تو زیادہ سے زیادہ تعداد میں لوگوں کو ایسی درخواست ڈالنے کے لئے تیار کریں۔ ظاہر ہے ، جب زیادہ تعداد میں لوگ سوال پوچھیں گے تو اس سے بننے والے دبائو کا اثر بھی اتنا ہی زیادہ ہوگا۔’’ چوتھی دنیا‘‘ ہر قدم پر آپ کے ساتھ ہے۔ کسی بھی مسئلے یا سجھائو کے لئے آپ ہم سے رابطہ کر سکتے ہیں۔ اس شمارے میں میں ایم پی فنڈ سے متعلق ایک آر ٹی آئی دراخوست شائع کی جارہی ہے، جسے آپ استعمال کر سکتے ہیں۔ ساتھ ہی دیگر لوگوں کو بھی اس کے استعمال کے لئے راغب کرسکتے ہیں۔
ایم پی ترقیاتی فنڈ کا نمونہ
فرسٹ اپیلیٹ آفیسر
(محکمہ کا نام)
(محکمہ کا پتہ)
موضوع: حق اطلاع ایکٹ2005 کے تحت درخواست

جناب عالی،

برائے کرم………اسمبلی پارلیمنٹ حلقے کے ایم ایل اے ایم پی ترقیاتی فنڈ کے تعلق سے مندرجہ ذیل اطلاعات فراہم کرائیں:۔
…….سے…….کے دوران مذکورہ انتخابی حلقے کے ایم ایل اے ایم پی کے ترقیاتی فنڈ سے کرائے گئے سبھی کاموں سے متعلق مندرجہ ذیل تفصیل دیں: کام کا نام………کام کی مختصر وضاحت…….کام کے لئے منظور شدہ رقم……..کام منظور ہونے کی تاریخ………کام ختم ہونے کی تاریخ یا جاری کام کی صورت حال………کام کرانے والی ایجنسی کا نام…….کام شروع ہونے کی تاریخ………کام کے لئے ٹھیکہ کس ریٹ پر دیا گیا…….کتنی رقم کی ادائیگی کی جا چکی ہے………کام کے لائن ڈائی گرام کی مصدقہ کاپی……..اس کام کو کرانے کا فیصلہ کب اور کس بنیاد پر لیا گیا؟اس سے متعلق فیصلے کی کاپی بھی مہیا کرائیں۔
مذکورہ نمائندے کو جاری مالی سال میں کل کتنی رقم الاٹ ہوئی ہے اور پچھلے مالی سال میں کتنی رقم باقی رہی؟
مذکورہ کاموں میں سے اب تک کتنے کاموں کے لئے اور کل کتنی رقم منظور کی جا چکی ہے؟
مذکورہ کاموں میں سے کن کن کاموں کے لئے اور کتنی رقم منظور ہونی ہے؟
میں درخواست فیس کے طور پر ………روپے الگ سے جمع رہا ,رہی ہوں۔
یا
میں بی پی ایل کارڈ ہولڈر ہوں، اس لئے سبھی طرح کی فیس سے آزادہوں۔ میرا بی پی ایل کارڈ نمبر………ہے۔ اگر مانگی گئی اطلاع آپ کے محکمے دفتر سے متعلق نہ ہو تو حق اطلاعات قانون 2005 کی دفعہ 6(3) کا نوٹس لیتے ہوئے میری درخواست متعلقہ پبلک انفارمیشن آفیسر کو پانچ دنوں کے اندر منتقل کردیں۔ساتھ ہی آئین کے پروویزن کے تحت اطلاع فراہم کراتے وقت فرسٹ اپیلیٹ آفیسر کا نام اور پتہ ضرور بتائیں۔
مخلص
نام :————————————-
پتہ : ————————————–
تاریخ : ————————————
منسلک دستاویز

(اگر کچھ ہوتو)

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *