پریمار جن نیگی ایشیائی شطرنج چمپئن بنے

گرینڈ ماسٹر پریمارجن نیگی نے ویتنام میں ہوئے ایشین کانٹی نینٹل ٹورنامنٹ میں جیت حاصل کر لی۔یو اے ای کے اے آر سلیم سے ہارنے کے باوجود نیگی پوائنٹ ٹیبل میں سرفہرست رہے۔ نیگی ٹورنامنٹ میں کل 7پوائنٹ لے کر چین کے یوں ینگئی کے ساتھ سرفہرست رہے تھے۔ مگر نیگی اور ینگئی کے درمیان ہوئے مقابلہ میں نیگی نے جیت حاصل کی تھی۔ اسی بنیاد پر نیگی کو فاتح قرار دیا گیا۔ ینگئی کو دوسرے مقام سے ہی اکتفا کرنا پڑا۔
متالی انگلینڈ دورہ کے لئے کپتان ہوں گی
ہندوستانی خاتون ٹیم کے انگلینڈ دورہ کے لئے متالی راج کو کپتان مقرر کیا گیا ہے۔ انجم چوپڑا کو کپتانی کے ساتھ ساتھ ٹیم میں جگہ بھی گنوانی پڑی ہے۔ جھولن گوسوامی کو کپتان کے عہدہ سے ہٹائے جانے کے بعد متالی کو کپتان بنانے کی اٹکلیں تیز ہونے لگی تھیں۔ لیکن اچانک دو سال بعد واپسی کرنے والی انجم کو ٹیم کا کپتان بنا دیا گیاتھا۔ مگر گزشتہ مقابلوں میں انجم کی خراب کارکردگی کو دیکھتے ہوئے انہیں ٹیم سے باہر کر دیا گیا ،اور یہ ذمہ داری اسٹار بلے باز متالی راج کو دی گئی ہے۔ ہندوستانی ٹیم کو 25جون سے 11جولائی کے درمیان دوٹی -20اور پانچ ون ڈے انٹرنیشنل مقابلہ کھیلنے ہیں۔
اوم پرکاش کا گولہ پھینک میں نیشنل ریکارڈ
اوم پرکاش سنگھ نے گولا پھینک (شارٹ پٹ) کا 12سال پرانا نیشنل ریکارڈ توڑ کر اپنے نام کر لیا ہے۔ اوم پرکاش نے 20.69میٹر کی دوری تک گولا پھینک کر نیا ریکارڈ بنایا۔ 25سالہ اوم پرکاش نے شکتی سنگھ کے ذریعہ 2000میں بنائے گئے 20.42میٹر کے ریکارڈ کو توڑا۔ شکتی سنگھ نے لندن اولمپک کے لئے اے اسٹینڈرڈ کی ترجیح حاصل کر لی ہے، لیکن اوم پرکاش کی کارکردگی کے باوجود اسے نیا قومی ریکارڈ مانے جانے کی بحث زوروں پر ہے۔
اسپینش گراں پریکس پاسٹور مالڈو ناڈو کی جیت
اس سال کا فارمولہ ون سیزن انتہائی دلچسپ ہوتا نظر آ رہا ہے۔ اب تک ہو چکی پانچ ریسوں کے پانچ ونر سامنے آئے ہیں۔ اس ریس میں جیت حاصل کرنے والے پاسٹور مالڈوناڈو فارمولہ ون ریس جیتنے والے پہلے وینوجویلیائی ڈرائیور بن گئے ہیں۔ ولیمس ٹیم کے مالڈوناڈو نے ولیمس ٹیم کو 132ریسوں اورآٹھ سال بعد فتح دلائی۔ ریس میں فیراری کے فرنینڈو الونسو دوسرے مقام پر رہے اور لوٹس کے کمی ریکونین تیسرے مقام پر رہے۔ آخری بار ولیمس ٹیم کے کسی کھلاڑی نے 2004میں فارمولہ ون ریس جیتی تھی۔ نو بار میوفیکچر ونر رہ چکی ولیمس کی ٹیم آخری بار 1997میں چمپئن بنی تھی۔
مانچسٹر سٹی 44سال بعد چمپئن بنا
مانچسٹر سٹی 44سال بعد انگلش پریمئر لیگ فٹبال کا خطاب جیتنے میں کامیاب ہوا ہے۔ مانچسٹر سٹی نے آخری بار 1968میں ای پی ایل خطاب اپنے نام کیا تھا۔ اس سیزن میں مانچسٹر سٹی نے بہترین مظاہرہ کیا۔ فائنل میں مانچسٹر سٹی نے کوئین پارک رینجرس کو 3-2سے ہرا کر خطاب جیتا۔ میچ کے فیصلہ کن دو گول انجری ٹائم میں ہوئے اور گول کے فرق کے لحاظ سے مانچسٹر یونائٹڈ کو پچھاڑتے ہوئے فاتح بن گئے۔ اس خطابی فتح کے بعد مانچسٹر سٹی کے کوچ روبرٹو مینسنی نے کہا کہ یہ دن کلب اور مداحوں کے لئے تاریخی ہے۔ مانچسٹر سٹی نے آخری پانچ منٹ میں دو گول کر کے مانچسٹر یونائٹڈ کو 13ویں بار ای پی ایل کا فاتح بننے سے روک دیا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *