این ایچ اے آئی کا داخلی خلفشار

دلیپ چیرین
اپنی وزارت کی اہم اسکیموں کی راہ میں ٹانگ اڑانے والوں کے خلاف بیان دے کرروڈ ٹرانسپورٹ اورشاہراہوں کے وزیر کمل ناتھ کافی سرخیاں بٹور چکے ہیں، لیکن انہیں شاید پہلے اپنی وزارت کے افسران سے جواب طلب کرنا چاہیے۔ کچھ دن پہلے سی بی آئی نے نیشنل ہائی وے اتھارٹی آف انڈیا (این ایچ اے آئی) کے ایک سینئر افسر کے خلاف تفتیش شروع کرنے کی سفارش کی تھی۔ این ایچ اے آئی میں ایڈیشنل سکریٹری سطح کے افسر ایس آئی پٹیل پر شاہراہ پروجیکٹ کے ٹھیکوں میں بدعنوانیوں کا الزام ہے، لیکن وزارت کے افسران اس میں تعاون نہیں کر رہے ہیں۔ پٹیل اور این ایچ اے آئی کے کچھ دیگر افسران کے خلاف تفتیش شروع کرنے سے قبل کابینی سکریٹریٹ اور وزارت روڈ ٹرانسپورٹ سے اجازت مانگی تھی، لیکن این ایچ اے آئی نے سی بی آئی پر ہدایات کی تعمیل نہیں کرنے کا الزام لگاتے ہوئے اجازت دینے سے انکار کر دیا۔  واضح ہے کہ کمل ناتھ کو پہلے اپنی وزارت کے داخلی معاملات پر توجہ دینی ہوگی۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *