کنگنا رناوت ڈان کی معشوقہ

رتک روشن کے ساتھ راکیش روشن کی ہوم پروڈکشن فلم ’’کائٹس‘‘ میں بہترین ڈانس کر کے کنگنا راناوت نے یہ ثابت کر دیا ہے کہ وہ بالی ووڈ کے لئے بالکل پرفیکٹ ہیں۔ راکیش روشن کے بعد ملن لتھوریا کی ان پر نظر پڑی ہے۔ فلم ’لو سیکس اور دھوکا‘ کے بعد بالا جی کا اگلا پروجیکٹ ہے فلم ’ونس اپان اے ٹائم ان ممبئی‘ جو اپنے اسٹائل اور لک کی وجہ سے پہلے ہی لوگوں کے درمیان اشتیاق پیدا کر چکی ہے۔ ان دنوں پروڈکشن ہائوسیز میں کامیڈی اور رومانٹک فلمیں زیادہ بن رہی ہیں۔ وہیں بالا جی نے اس سے بالکل مختلف 1970کے دور کے ممبئی شہر میں ابھرتے ہوئے انڈر ورلڈ کے پس منظر پر فلم بنانے کی جرأت کی ہے۔ اس میں انڈر ورلڈ کے کنگ سلطان(اجے دیوگن) کے طلوع کے بعد اس کے غروب ہو کر گرنے اور اس کے ساتھی شعیب (عمران ہاشمی) کے ذریعہ اس کی گدی چھیننے کی کہانی ہے۔ فلم کو 70کی دہائی والے رومانس، اسمگلنگ ،کیبرے اور مافیا راج کا تڑکا دیا گیا ہے۔ اس دور میں جن خواتین کو انڈر ورلڈ کی ہوا لگی تھی وہ بے خوف ہوا کرتی تھیں۔ اس فلم میں ایسی ہی خاتون کا کردار ادا کیا ہے کنگنا راناوت نے، جو ریحانہ کے کردار میں اجے دیوگن کی معشوقہ بنی ہیں۔ ملن کا کہنا ہے کہ انہیں کنگنا اس کردار کے لئے بہت پسندآئی، کیونکہ ان کا چہرہ بہت الگ ہے اور الگ الگ میک اپ سے وہ ہر روز مختلف لک دیتی ہیں۔ ان کی باڈی بھی بہت اچھی ہے، جو ایکسپوزر سے فحش نہیں، بلکہ گلیمرس لگتی ہیں۔ کردار کے ساتھ انصاف کرنے کے لئے کنگنا نے مغربی ممالک اور بالی ووڈ کے اس دور کے فیشن کو کافی اسٹڈی کیا ہے۔ کنگنا کے کاسٹیوم مانوشی ناتھ اور روشی شرما کے ذریعہ ڈیزائن کئے گئے ہیں۔ انھوں نے ڈریس ڈیزائن کرنے سے پہلے کنگنا کے کردار کو اچھی طرح سے سمجھا اور پھر بال، ایکسسریز اور کاسٹیوم کے اسکیچ بنائے، کنگنا کا لک کچھ اس طرح بنایا گیا ہے، جس میں وہ پرفیکٹ مونا نظر آتی ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *