آئی پی ایل 3سے باہر رہیں گے رویندر جڈیجہ

آئی پی ایل اور بی سی سی آئی کے منمانے رویہ کے سبب ہندوستان کرکٹ ٹیم کے آل راﺅنڈر اور انڈین پریمئر لیگ کے پہلے دو سیزن میں راجستھان رائلس کی جانب سے کھیلنے والے رویندر جڈیجہ ٹورنمنٹ کے تیسرے سیزن میں شریک نہیں ہو پائیں گے۔ جڈیجہ پر الزام ہے کہ انھوں نے بغیر سابقہ اجازت کے دوسری ٹیموں کے ساتھ ایگریمنٹ کرنے کے لئے مول بھاﺅ کرنے کی کوشش کی۔
جڈیجہ کی ان کوششوں کو آئی پی ایل کے ضابطوں کی خلاف ورزی مانتے ہوئے انہیں ایک سال کے لئے ٹورنمنٹ میں حصہ لینے سے ممنوع کر دیا گیا۔جڈیجہ نے اس فیصلہ کے خلاف اپیل دائر کی،لیکن بی سی سی آئی نے ان کی اپیل کو خارج کر دیا اور ہندوستان کرکٹ کا یہ ابھرتا ہوا ستارہ کھیل کے اس سب سے گلیمرس اوتار میں اپنی شرکت کرنے سے محروم رہ گیا ۔حالانکہ جڈیجہ، ان الزامات سے انکار کرتے ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ راجستھان رائلس کے ساتھ ان کا قرار دسمبر 2009میں ہی ختم ہو گیا تھا اور اس کی تجدید کے سلسلہ میں ٹیم انتظامیہ نے انہیں کوئی جانکاری نہیں دی۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ وہ دوسری ٹیموں سے بات چیت کرنے سے قبل بی سی سی آئی کی اجازت لینے کے خواہشمند تھے،لیکن دیگر وجوہات سے ایسا نہیں ہو پایا۔
تعجب کی بات تو یہ ہے کہ جڈیجہ کی اپیل پر آئی پی ایل نے بھی اپنے ہاتھ کھڑے کر دیئے۔ آئی پی ایل کے چیئر مین للت مودی نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اپیل پر فیصلہ لینے کا اختیار صرف بی سی سی آئی کے پاس ہے۔ بی سی سی آئی نے ان کی اپیل کو خارج کرتے ہوئے یہ ترک دیا کہ وہ اس فیصلہ کی بنیاد پر بقیہ کھلاڑیوں کے سامنے ایک مثال پیش کرنا چاہتے ہیں تاکہ ایسے معاملے دوبارہ نہ ہوں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *