افسران کے رویہ سے ناراض بندرا، کھیل کو الوداع کہہ سکتے ہیں

دہلی:پیئچنگ اولمپک میں ملک کو گولڈ میڈل دلانے والے ابھینو بندرا کھیل افسران کے رویہ سے ناخوش ہیں۔انھوں نے کھیل تک کو الوداع کہنے کی بات کہہ ڈالی ہے۔ادھر اطلاع ہے کہ وہ آج ٹرائل تک کے لئے نہیں پہنچے۔بندرا دراصل اس سال ہونے والے کامن ویلتھ گیمس اور چین میںہونے والے ایشیاڈ کی تیاری کے لئے تربیت ملک کے باہر لینا چاہتے ہیں۔مگر، نیشنل رائفل ایسو سی ایشن ( این آر آئی)چاہتی ہے کہ وہ ہندوستان میں ہی معین ٹرائل میں ہی حصہ لیتے رہیں۔بندرا گزشتہ دسمبر میں ایسے ہی ایک ٹرائل میں حصہ لینے جرمنی سے ہندوستان آئے بھی، لیکن آخری وقت میں وہ ٹرائل رد ہوگیا۔
ابھینو ناراض اس بات کو لے کر ہیں کہ اسپورٹ اتھارٹی کے تلخ رویہ ، لال فیتا شاہی اور بے وجہ کے پروٹوکال کے سبب ہی وہ کھیل کو الوداع کہہ سکتے ہیں۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *