کلارک اور پونٹنگ کی سنچریاں

پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان ہوبارٹ میں ہونے والے تیسرے ٹیسٹ میچ کے پہلے دن کھیل کے اختتام پر تین وکٹ کے نقصان پر تین سو دو رنز بنا لیے ہیں۔
آسٹریلوی اننگز کی خاص بات کپتان رکی پونٹنگ اور مائیکل کلارک کی سنچریاں تھیں۔
کلِک میچ کا تفصیلی سکور کارڈ
جب پہلے دن کا کھیل ختم ہوا تو پونٹنگ ایک سو سینتیس جبکہ مائیکل کلارک ایک سو گیارہ رن پر کھیل رہے تھے۔ ان دونوں بلے بازوں کے درمیان اب تک دو سو سے زائد رن کی شراکت داری ہو چکی ہے۔پونٹنگ نے اپنی سنچری تیرہ چوکوں کی مدد سے ایک سو پینسٹھ گیندوں پر بنائی جبکہ کلارک نے اپنے سو رن گیارہ چوکوں کی مدد سے مکمل کیے۔مائیکل کلارک ایک سو گیارہ بنا کر ناٹ آو¿ٹ ہیں۔تیسرے ٹیسٹ میں پاکستان کی ناقص فیلڈنگ کا سلسلہ جاری رہا اور محمد عامر نے محمد آصف کی گیند پر رکی پونٹنگ کا ایک آسان کیچ اس وقت چھوڑا جب انہوں نے اپنی اننگز ی ابتدائ ہی کی تھی۔ رکی پونٹنگ کا وہ کیچ اگر پکڑ لیا جاتا تو وہ لگاتار دو ٹیسٹ میچز میں صفر پر آو¿ٹ ہوتے۔آو¿ٹ ہونے کھلاڑیوں میں واٹسن انتیس، کیٹچ گیارہ اور ہسی چھ رن بنا کر آو¿ٹ ہوئے۔ ان کی وکٹیں بالاترتیب عمر گل، محمد آصف اور عامر نے حاصل کیں۔پاکستان نے اس ٹیسٹ میچ کے لیے ٹیم میں چار تبدیلیاں کی ہیں اور کامران اکمل، محمد سمیع، فیصل اقبال اور مصباح الحق کی جگہ سرفراز احمد، خرم منظور، محمد عامر اور شعیب ملک کو ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔آسٹریلیا کی ٹیم: کیٹچ، اٹسن، بونٹنگ، مائیک ہسی، کلارک، ہادن، جونسن، ہورٹز، سڈل اور بولنجر۔پاکستان کی ٹیم: عمران فرحت، سلمان بٹ، خرم منظور، محمد یوسف، عمر اکمل، شعیب ملک، احمد، محمد عامر، عمر گل، آصف اور دانش کنیریا۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *