سکم میں ایس ڈی ایف کے 10 ارکان اسمبلی بی جے پی میں شامل

Share Article
10 members of SDF in Sikkim join BJP

بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو شمال مشرقی ریاست سکم میں بڑی کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ ریاست کی سب سے اہم علاقائی پارٹی سکم ڈیموکریٹک فرنٹ (ایس ڈی ایف) کے دس ارکان اسمبلی نے بی جے پی کی رکنیت قبول کر لی ہے۔ اس کے ساتھ ہی سکم میں بی جے پی کو اہم اپوزیشن پارٹی کا درجہ مل گیا۔

بی جے پی ہیڈ کوارٹر میں منگل کے روز پارٹی کے ایگزیکٹو چیئرمین جے پی نڈڈا نے ایس ڈی ایف کے دسوںایم ایل اے کو بی جے پی میں شامل کرایا۔ اس کے بعد منعقد ہ پریس کانفرنس میں بی جے پی جنرل سکریٹری رام مادھو نے ایس ڈی ایف ممبران اسمبلی کے بی جے پی میں شامل ہونے کا اعلان کیا۔

سکم کے سابق وزیر اعلیٰ اور ایس ڈی ایف لیڈر پون چاملنگ کے لئے یہ بہت بڑا جھٹکا ہے۔ چاملنگ کے نام سب سے طویل عرصہ تک سکم کا وزیر اعلیٰرہنے کا ریکارڈ ہے۔ ہے. اس سال گزشتہ مئی ماہ میں ہوئے اسمبلی انتخابات میں چاملنگ کی پارٹی ایس ڈی ایف کو اقتدار سے بے دخل ہونا پڑاتھا۔

ایس ڈی ایف کے ممبر اسمبلی دورجی سیرنگ لیپچا، اگین سیرنگ گیسٹو، نریندر کمار سبا، ڈی آرتھاپا، کرماسونیم لاپچا، کے وی رائے، ٹی ٹی بھوٹیا، فرمنتی تمانگ، پنٹو نانگیال نیپچا،راجکماری تھاپا نے بی جے پی کی رکنیت حاصل کی۔

اس موقع پر بی جے پی کے جنر ل سیکرٹری رام مادھو نے کہا کہ سکم میں گزشتہ 25 سال سے ایس ڈی ایف کی قیادت کی حکومت رہی۔ مئی میں اختتام پذیر ہوئے انتخابات میں ایس ڈی ایف کے 13 رکن اسمبلی منتخب ہوئے، جس سے دس ممبران اسمبلی نے بی جے پی کی رکنیت حاصل کر لی۔ ایس ڈی ایف سکم میں اپوزیشن پارٹی ہے لیکن دس ممبران اسمبلی کے بی جے پی میں شامل ہونے کے ساتھ ہی سکم اسمبلی میں بی جے پی اپوزیشن پارٹی کے طور پر ابھر کر آئی ہے۔

Share Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *